ماسکو: کنسرٹ ہال میں فائرنگ، دستی بم حملہ، 115 افراد ہلاک، 4 دہشتتگرد گرفتار

روسی دارالحکومت ماسکو میں کنسرٹ ہال کے اندر موجود دہشت گردوں نے فائرنگ کردی اور دستی بم پھینکے، جس کے سبب 115 افراد ہلاک اور 140 زخمی ہوگئے، چار افراد کو گرفتار کرلیا گیا۔

ماسکو میں فوجی وردی میں ملبوس 5 دہشت گردوں نے کروکس سٹی ہال میں فائرنگ کی۔

جائے وقوع پر موجود ایک صحافی نے بتایا کہ مسلح افراد نے خودکار فائرنگ کی اور دستی بم یا آگ لگانے والا بم پھینکا جس سے آگ تیزی سے کنسرٹ ہال میں پھیل گئی-

روسی ریسکیو سروسز نے کروکس سٹی ہال کے تہہ خانے سے تقریباً 100 سے زائد افراد کو نکال کر فوری طبی امداد کے لیے اسپتال روانہ کیا تاہم میڈیا رپورٹس کے مطابق فائر فائٹنگ عملے نے آگ پر قابو پا لیا، جبکہ نیشنل گارڈ فورس حملہ آوروں کی تلاش کر رہی ہے۔

روسی وزارت خارجہ کی ترجمان ماریا زاخارووا نے عالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس واقعے کو دہشت گردی قرار دے اور اس کی مذمت کرے۔

روسی صدر پوٹن نے حملے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس میں ملوث تمام دہشت گردوں کو اس کی بھاری قیمت چکانا پڑے گی۔

برطانوی میڈیا کے مطابق روس کے چیف سیکیورٹی آفیسر نے روسی صدر پوٹن کو بریفنگ میں بتایا ہے کہ حملے میں ملوث چار افراد کو گرفتار کرلیا ہے جب کہ سات مشکوک افراد کو بھی حراست میں لیا گیا ہے جن کے ملوث ہونے سےمتعلق تحقیقات جاری ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں