حیدرآباد میں پیپلزبس سروس کا دائرہ نہیں بڑھایاجاسکا

حیدرآباد میں 20 ماہ گزرنے کے باوجود پیپلزبس سروس کا دائرہ اندرون شہر کے مختلف علاقوں تک بڑھایا نہیں جاسکا جس کے سبب لاکھوں شہری مہنگائی میں سستی سفری سہولت سے محروم ہیں۔ سندھ کے دوسرے بڑے شہر حیدرآباد میں پیپلزبس سروس کا افتتاح 19 نومبر 2022 کو صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ شرجیل انعام میمن نے کیا تھا۔

حیدر چوک، ٹھنڈی سڑک، وحدت کالونی، ہالہ ناکہ، قاسم چوک، ہٹری بائی پاس روٹ پر چلنے والی پیپلزبس سروس سے شہری مستفید تو ہو رہے ہیں لیکن شہر لطیف آباد، قاسم آباد کے اندرون شہر کی لاکھوں آبادی 20 ماہ گزر جانے کے باوجود پرائیویٹ ٹرانسپورٹر کے رحم وکرم پر ہیں۔

حیدرآباد میں خواتین کے لیے شروع کی جانے والی پنک بس کی سہولت بھی ختم کردی گئی۔دوسری جانب صوبائی وزیرشرجیل انعام میمن نے ایک بار پھرشہریوں کو نوید سنائی کہ بسوں کو دیگر روٹ پر بھی شروع کیا جارہا ہے۔ شہریوں کا کہنا ہے کہ شہر کے 9 ٹاونز میں ایسے روٹس بناکر بس سروس فوری شروع کی جائے جس سے لوگوں کو باآسانی سفری سہولت میسر ہوسکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں