کراچی انٹرنیشنل بک فیئر 2023 کا آغاز14 دسمبر سے ہوگا

پاکستان پبلشرز، بک سیلرز ایسوسی ایشن کے تحت 18 واں کراچی انٹرنیشنل بک فیئر 2023 ایکسپو سینٹر میں 14 دسمبر سے شروع ہوگا،
5 روزہ کتب میلہ 18 دسمبر تک جاری رہے گا۔

عالمی کتب میلے میں ترکی، سنگاپور، چین، ملائیشیا، برطانیہ، متحدہ عرب امارات سمیت 17 ممالک کے 40 ادارے حصہ لیں گے، نمائش میں 330 اسٹالز لگائے جائیں گے، نہایت کم قیمت پر کتابیں دستیاب ہوں گی۔

افتتاحی تقریب کے مہمان خصوصی نگران وزیراعلی سندھ مقبول باقر ہوں گے، مہمان اعزازی نگراں وزیر اطلاعات محمد احمد شاہ ہوں گے۔

پاکستان پبلشرز، بک سیلرز ایسوسی ایشن کے چیئرمین عزیر خالد اور کنوینر KIBF وقار متین نے مقامی ہوٹل میں پریس کانفرنس میں عالمی میلے کی تفصیلات سے آگاہ کیا، اس موقع پر ناصر حسین، ندیم مظہر، ایم اقبال غازیانی، اقبال صالح محمد، ندیم اختر، کامران نورانی، سلیم عبدالحسین، سعد بن عزیز، اصغر زیدی اور اویس مرزا جمیل بھی موجود تھے۔

عزیز خالد نے کہا کہ حکومت درآمدی کاغذ پر عائد ڈیوٹی کی شرح کم کردے تو کتابوں کی قیمتیں 50 فیصد کم ہوجائیں گی، 80 فیصد آبادی دیہی علاقوں میں رہتی، جہاں انٹرنیٹ دستیاب نہیں، شائع کتابوں کی اہمیت کم نہیں ہوسکتی۔

انہوں نے کہا کہ KIBF کا حالیہ ایڈیشن پچھلے تمام ایونٹس کے مقابلے میں منفرد ہوگا، جس میں اس عالمی کتب میلے کے ذریعے پیشہ ورانہ مہارت اور دیگر امور کا تبادلہ بھی کیا جائے گا۔

کے آئی بی ایف کے کنونیر وقار متین نے کہا کہ 2005 سے کراچی عالمی کتب میلے کو ملک کے سب سے بڑے تجارتی میلے کا بھی اعزاز حاصل ہے، یہ میلہ تمام پبلشرز، ڈسٹربیوٹرز، ملکی و غیرملکی پبلشرز، لائبریرینز اور صارفین کو ایک پلیٹ فارم پر لاتا ہے۔

وقار متین کا کہنا تھا کہ ہر سال ہونے والا یہ عالمی میلہ لاکھوں طلبہ، والدین، ادبی و تدریسی شخصیات اور مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد کی خاص توجہ کا مرکز رہا ہے۔

انہوں نے پبلشرز کا خصوصی شکریہ ادا کیا، جن کی وجہ سے یہ کتب میلہ اپنی کامیابیوں کا تسلسل برقرار رکھ سکا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں