خواتین کو وراثت کے حق سے محروم کرنے کی رسم وفاقی شرعی عدالت میں چیلنج

اسلام آباد: خواتین کو وراثت کے حق سے محروم کرنے کی رسم کو وفاقی شرعی عدالت میں چیلنج کردیا گیا۔

اس حوالے سے درخواست سیدہ فوزیہ جلال شاہ کی جانب سے حماد سعید ڈار ایڈووکیٹ کے توسط سے دائرکی گئی ہے۔ درخواست میں وفاق پاکستان کو وفاقی وزارت قانون وانصاف کے توسط سے فریق بنایا گیا ہے۔

درخواست میں ایسے رواج کو کالعدم قراردینے کی استدعا کی گئی ہے جن کے ذریعہ خواتین کو ان کے جائز وراثتی حقوق سے محروم کیا جارہا ہو یا خواتین ایسے کسی مروجہ رواج یا دبائوکے تحت اپنے حصہ سے دستبردار ہوچکی ہوں یا اپنا حصہ چھوڑ چکی ہوں یا تاحال اپنا موروثی حصہ لینے کے لئے دھکے کھارہی ہوں۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ ایسی تمام خواتین مذکورہ عنوان بالاکیس میں درخواست دے کرفریق بن سکتی ہیں۔ اس ضمن میں متاثرہ خواتین مفاد عامہ کے تحت اوراپنے حق کے لئے کسی بھی ایسے رواج سے متعلق وفاقی شرعی عدالت میں فریق بن کر عدالت کے نوٹس میں لاسکتی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں