بلاول ابھی بچہ، زیر تربیت،‌‌ ٹکٹ دینا میرا اختیار ہے، آصف علی زرداری

پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کے چیئرمین اور آصف علی زرداری نے بلاول بھٹو کو زیر تربیت کہہ دیا۔

ایک انٹرویو میں آصف زرداری نے بتایا کہ بلاول ابھی مکمل ٹرینڈ نہیں ہوا، بلاول3 پی والی پیپلز پارٹی کے چیئرمین ہیں لیکن وہ 4 پی والی جماعت کے سربراہ ہیں، ٹکٹ دینے کا اختیار اُن کے پاس ہے ، بلاول کو بھی وہ ہی ٹکٹ دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ نئی نسل کی اپنی سوچ ہے، وہ کہتی ہےکہ ’’بابا آپ کو کچھ نہیں پتا‘‘ اسے سوچ کے اظہار کا مکمل حق ہے، سوچ کے اظہار پر تو ٹیکس نہیں، وہ بلاول کو بیان دینے سے روکیں گے نہیں، کیوں کہ اگر وہ ناراض ہوگیا اور کہا کہ گھر بیٹھ جاتا ہوں تو وہ کیا کریں گے۔

آصف زرداری نے کہا کہ بلاول اور ان کا بیانیہ گُڈ کوپ بیڈ کوپ کا نہیں ، یہ ہر گھر کی کہانی ہے ، لیکن یہ الگ بات ہے کہ میاں صاحب کے سامنے کوئی بات نہیں کرتا ، اُن سے سب ڈرتے ہیں۔

سابق صدر نے کہا کہ ضروری نہیں کہ ن لیگ لیڈ کرے، دوسری جماعتیں اور شخصیات بھی ہیں، بہتر ہے اس نہج پر چلیں کہ آگے بھی چل سکیں، انہیں چاہیے ہمیں موقع دیں،اب ہم اپنے لیے گیم لگائیں گے۔

آصف زرداری نے کہا کہ پیپلزپارٹی اس الیکشن میں اچھا خاصا سرپرائز دے گی، پیپلز پارٹی کے خلاف ہمیشہ اتحاد بنتے ہیں، فنکشنل لیگ نے ہمارے خلاف الائنس بنائے، ایم کیو ایم پہلے بھی ساتھ نہیں تھی، اب بھی نہیں ہے، ایم کیو ایم نے کہا تب حمایت کریں گےجب گورنر دیں گے، ہم نے کہا ٹھیک ہے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ کوئی پارٹی 172 کی اکثریت نہیں لے سکتی، اکثریت ن لیگ، نہ مولانا، نہ کوئی اور نہ پیپلز پارٹی لے سکتی ہے، جمہوریت تو کافی عرصے سے کمزور ہورہی ہے، پارلیمنٹ کو اختیارات دینا دوست کو سمجھ نہیں آیا، انہوں نے میری چھٹی کروا دی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں